معاونت:کتب

ویکی کتب سے
Jump to navigation Jump to search
  • :کچھ ایسی کشمکش میں میری زندگی رہی
  • :سب کچھ کیا نصیب میں لا حاصلی رہی
  • :اک عمر اس کی یاد میں ھم نے گزار دی
  • :پھر بھی مزاج یار میں ایک برہمی رہی
  • :وہ لمحے گرد ہو گئے لمحوں کے ساتھ ساتھ
  • :کچھ روز تیرے ساتھ جب وابستگی رہی
  • :یہ اور بات‘تم کو بھلاتے رھے ہیں ھم
  • :تم سے بچھڑ کے عمر بھر اک بے کلی رہی
  • :فرزانؔ ہمارا جینا بھی ‘ کار محال تھا
  • :مرنے کی جستجو بھی نہ ليکن کبھی رہی
  • :شاعر : فرزان فرزان گل
  • :۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


۳ شعر شاعر : فرزان فرزان گلِ اس کی ادا کو ديکھيئے اقرار ديکھيئے اور ساتھ ساتھ پيارا سا انکار ديکھيئے ہو زندہ دِل تو اس کی تعريف کيجئے آنکھيں اگر ہيں تو عکس رخ يار ديکھيئے آےٌ شب وصال وہ اول تو دير سے آتے ہی ان کا جانے پہ اصرار ديکھيئے شاعر : فرزان فرزان گلِ اظہار اگر چہ سب کا ہی والہانہ لگے گا مرا طرزِ پذيرائی سب سے جداگانہ لگے گا پاس محبت تو فقط احساسِ وفا ہے فرزان وہ روٹھے گا بھی تو بے وفا نہ لگے گا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔